کالم/مضامین

عنوان : ختم نبوت ﷺ اور امام مہدیؑ، تمام تدریسی انسٹیٹیوٹ کے نصاب میں ناگزیر

ٹائٹل: بیدار ھونے تک

عنوان : ختم نبوت ﷺ اور امام مہدیؑ، تمام تدریسی انسٹیٹیوٹ کے نصاب میں ناگزیر۔۔۔ !!

کالمکار: جاوید صدیقی

حالیہ دنوں میں پاکستان بھر کے تعلیمی اداروں ، مدارس اور کیمریج انسٹیٹیوٹ میں بورڈز کے نصاب میں دو اسباق کو شامل کرنے کے حوالے سے بنام مخاطب ھوا جن میں وزیر اعظم، صدر پاکستان، اسپیکر قومی اسمبلی، چیئرمین سینٹ، سپہ سالار افواج پاکستان، چیف جسٹس پاکستان، وفاقی و صوبائی وزیر تعلیم سمیت چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ سے درخواست کی کہ موجودہ حالات کے تناظر میں ھمارے ملک کی نئی نسل کی ذہنی مذہبی ایمانی تجوید رہنمائی اصلاحی اور حقائق کو قائم رکھنے کیلئے نہم یا دھم جماعت کے سبجیکٹ اردو یا اسلامیات میں دو اسباق کا لازمی اضافہ کردیا جائے جن میں اوٌل سبق ختم الانیباء محمد الرسول اللہ ﷺ اور دوئم سبق محمد بن عبداللہ لقب امام مہدی علیہ السلام "آخری امام زمانہ” کو شامل کرلیا جائے کیونکہ عصر حاضر کے تقاضوں کے مطابق فتنہ فساد اور دین محمدی ﷺ میں لادین قادیانیوں اور کافر و مشرکین کی چھیڑ چھاڑ انتہائی بڑھ چکی ھے۔ ان کی شر انگیزیوں سے پناہ اور محفوظ رہنے کیلئے پاکستانی قوم کے طلباء و طالبات کیلئے ان اسباق کو شامل کرنا ناگزیر ھوچکا ھے۔ ان اسباق سے ہر سال لازماً بورڈز کے سالانہ امتحانات میں شامل کئے جائیں اور ان دو اسباب پر مبنی سوالوں کے جوابات پر 10، 10 نمبرز مشتمل کیئے جائیں تاکہ طلباء و طالبات کی زیادہ سے زیادہ رغبت اور دلچسپی بڑھے یہی عمل پاکستان بھر میں کیمریج اسکول و انسٹیٹیوٹ میں بھی لازماً جاری رکھا جائے میں تو یہی کہوں گا کہ کیمریج اسکولوں کے آزاد خیال طلباء و طالبات کو زیادہ ضرورت ھے۔ سابقہ و موجودہ حکومتوں میں آئین کی کھلم کھلا خلاف ورزی کرتے ھوئے فتنہ باز لادینی طبقہ اادیانیوں نے دین محمدی ﷺ پر حملے کیئے۔ تاریخ ھمیں بتاتی ھے کہ یہودیوں نے اسلام کو نقصان پہنچانے کیلئے کوئی موقع نہیں چھوڑا۔ سپہ سالار فتح اسلام ولی صفت نور الدین زنگیؒ نے اس وقت کے بہپروپئے مولویوں کو پکڑا جو موجہُ شریف پر گستاخی کرنے والے تھے۔ آپ ﷺ نے نورالدین زنگی کو پہچان کیلئے ان دونوں خبیث ملعونوں کا چہرہ دکھایا۔ نورالدین زنگی نے گرفتار کرکے سرقلم کرکے چوراھے پر کئی دنوں تک لٹکایا تاکہ پھر کوئی خبیث لادین مشرک کافر دین محمدی ﷺ کو ضرب پہچانے کا سوچے بھی نہیں۔ دین محمدی ﷺ تا قیامت تک کیلئے آیا ھے اور اس کی حفاظت اللہ نے خود لی ھے جو اللہ کا ساتھ دیتے ہیں اور دین محمدی ﷺ کی حرمت و حفاظت کے سپاہی و مجاہد بنتے ہیں وہ فرش سے عرش تک معروف و معتبر ھوجاتے ھیں۔ ھم ناچیز گناہگار اس قابل تو نہیں مگر دعا اور عملی کوشش کرتے ھیں کہ اللہ اپنے ان بندوں میں شامل کرلے جس سے اللہ کا محبوب نور مجسم ختم الرسل محمد مصطفیٰ ﷺ خوش اور راضی ھوکر اپنے غلاموں کی فہرست میں شامل کرلیں۔۔۔۔ معزز قارئین!! میں کسی طور طاقت نہیں رکھتا لیکن بحیثیت ایک صحافی و کلمکار اپنے قلم سے ایوان میں بیٹھے منتخب نمائندگان کو جھنجھوڑ بیدار کرسکتا ھوں کہ آپ کو اللہ نے ایسے منصب پر بیٹھایا ھے جہاں سے آپ ریاست پاکستان کی بہتری اور دین محمدی ﷺ کی بہتر انداز میں قانون سازی کرکے اصل طاقت کیساتھ خدمت سرنجام دے سکتے ھیں۔ بحیثیت امتی آپ پر بھی فرض ھے کہ دین محمدی ﷺ کے عروج اور درست آگاہی طلباء و طالبات میں اسلامی شعور کو اجاگر کرنے کیلئے ان دو اسباق کو شامل کرکے دونوں جہاں کی دولت کماسکتے ھیں گر آپ نے ایسا نہ کیا تو روز محشر کیا اللہ اور اس کے حبیب محمد ﷺ کے سامنے کیا منہ دکھائیں گے۔ میں ھر فورم پر دریچے ہر محفل ہر ملاقات ہر مقام پر لادین قادیانیوں یہودی زائینسٹ کی جانب سے شرانگیزیوں کی نشاہدہی، تنقید، تبصرہ، بیان، خبر اور احتجاج و مطالبہ کو قائم رکھوں گا مجھے ڈر ھے کہ آج کے فتنہ و فساد دجالی دور میں ان لادینوں قادیانیوں کی شرانگیزیوں پر خاموش رھا تو روز قیامت کیا منہ دکھاؤں گا۔ ھم مسلمان امت محمدی ﷺ کے پاس صرف ایمان ھوتا ھے اگر ایمان کی دولت ہاتھ سے نکل جائے تو کچھ بھی نہیں سوائے جہنم کے۔ مانا کہ یہ لادین زندیق ملحق قادیانی صرف ایمان پر حملہ کرتے ھیں کیونکہ یہی وطیرہ شیطان ابلیس کا ھے شیطان ابلیس ازل سے ابد تک بندہُ خدا کے ایمان کو چاٹتے چلا آرھا ھے اور یہی عمل قیامت تک رکھے گا۔ ھم مسلمانوں کو اللہ اور اسکے حبیب ﷺ نے قرآن و حدیث کے ذریعے بتادیا تھا کہ امت مسلمہ کے سب سے بڑے دشمن دو ہیں ایک شیطان دوسرا نفس یہی دونوں انسانوں کے ایمان چاٹ جاتے ھیں ان کے بیشمار سہولتکار ھیں جن میں سر فہرست یہودی زائینسٹ اور قادیانی شامل ھیں ان کے شر سے ہمیشہ ھوشیار رہنے کی تلقین فرمائی ھے۔ آخر میں جاوید صدیقی جرنلسٹ کراچی اپنا کالم مکمل کرتے ھوئے پاکستان کے مقتدران، ممبران ایوان وزیر اعظم و صدر پاکستان اور وفاقی و صوبائی وزرائے اعلیٰ سمیت وفاقی و صوبائی وزیر تعلیمات سے امید اور گزارش ایکبار پھر کرونگا کہ پاکستانی نصاب میں ان دو اسباق ختم نبوت ﷺ اور امام مہدی ؑ کو لازماً شامل کرنے کے فوری احکامات جاری کرنے کیلئے اپنا مثبت کردار ادا کرکے ھماری نئی نسل کا ایمان بچالیں شکریہ

MKB Creation

Mehr Asif

Chief Editor Contact : +92 300 5441090

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

MKB Creation
Back to top button

I am Watching You