کالم/مضامین

عنوان:27 ویں شبِ قدر’ اسرائیلی حملہ

ٹائٹل: بیدار ھونے تک

عنوان:27 ویں شبِ قدر’ اسرائیلی حملہ

27 ویں شبِ قدر کو بیت المقدس مسجد اقصیٰ میں جاری تراویح میں اسرائیلی فوجیوں نے نہتے فلسطینیوں پر حملہ یونہی اچانک نہیں کیا بلکہ مکمل سوچی سمجھی تیاری کیساتھ اہم شب اور اہم ماہ منتخب کیا اور دنیا بھر کے ایک ارب سے زائد عالم اسلام بلخصوص عربوں کو بتادیا کہ ہم گنتی میں کم ھونے کے باوجود تمہیں پاؤں کی نوک میں رکھتے ہیں۔ سعودی عرب سمیت تمام عرب امارات عیاشیوں اور بدکاریوں کے سبب دجالی آقاؤں کے قدموں میں گرے ھوئے ہیں۔ مسلمان جنگ صرف ایمان کی دولت اور طاقت سے جیتا ھے لیکن اگر مسلمان کا ایمان ختم کردیا جائے تو وہ بھڑوے ہیجڑے کنجر سے بھی بدتر ہوجاتا ھے۔ آج پندرہ ویں کے زمانے میں انہی دجالیوں اور اسرائیلیوں کے ایجنٹ اور کتے جہاد کو برا کہتے ہیں الله نے جہاد میں برکت اور افضلیت رکھی ھے یہ جہاد ھی تھا کہ جس نے امریکی کتوں کو ناک چبوادیئے اور بھاگنے پر مجبور کردیا۔ طالبان صرف الله کی رضا کیلئے جہاد کرتے ہیں اسی لیئے الله نے انہیں سرخرو کیئے رکھا ھے۔ اسرائیل بھارت اور امریکہ نے مسلمانوں بلخصوص دنیا کو دھوکہ دینے کیلئے اپنی دہشتگرد جماعت تحریک طالبان پاکستان جسے ٹی ٹی پی’ داعش اور آئی ایس آئی ایس بناکر مسلم دنیا میں جہاد کرنے والے خالصتاً تحریک طالبان جو بن لادن کی سربراہی میں بنائی گئی تھی اور بھی قائم ھے اور انشاءالله غزوہ ہند تک جاری رہیگی۔ دنیا کے دو مسلم خطے ایک جموں کشمیر دوسرا فلسطین برسا برس گزرنے کے باوجود آج تک اپنے جائز حقوق اور آزادی سے محروم ہیں اسکی سب سے بڑی وجہ مسلم دنیا کا ایمان سے خالی ھونا ھے اور دنیا پرستی میں اسقدر اندھے ہوچکے ہیں کہ چھوٹا ترین ملک اسرائیل ھے جو حملے کرکے عرب ممالک کو تباہ کرچکا ھے اردن بیروت شام مصر عراق کی تباہیاں کوئی ڈھکی چھپی نہیں ان سب کا سب سے بڑا مسلم دشمن امریکہ ھے جو عیاری و مکاری اور اپنے حلیف ممالک
کیساتھ مسلم ممالک کو ناتلافی نقصان سے دوچار کرچکا ھے۔ عالمِ اسلام میں گنتی کے چند ملک ہیں جن میں ایمان اور جذبہ جہاد قائم ھے ان میں پاکستان’ ایران’ انڈونیشیا’ روسی مسلم ریاستیں اور ترکی شامل ہے۔ ان مسلم ریاستوں میں پاکستان نہ صرف ایٹمی طاقت کا حامل ھے بلکہ اس ملک کے فوجی جوان دنیا کی بہترین افواج میں شمار کیئے جاتے ہیں۔ فوج ریاست کے ماتحت ھوتی ھے حکومت وقت ہی افواج کو جنگ کرنے یا نہ کرنے پر قادر ھوتی ھے۔ پاکستان کو چاہئے کہ وہ اسرائیل کو بتادیں کہ تم ہمارے نشانے کے زیر اثر ھو اگر پھر دوبارہ غلطی کی تو ہمارے راکٹ تم میں جا گھسیں گے اورسب کچھ نیس و نابود کردیں گے ھم مسلمانوں کے صبر اور جذبات کا مزید امتحان مت لو۔ ہمارے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی پپیتا ھیں وہ کیا دھمکی دیں گے انکی پتلون ڈھلی ھے عرصہ دراز سے امریکن پالیسیوں کے تابع رہے ہیں دکھاوے اور تماشے کی رسومات ہوتی ہیں انکے پاس دوسری جانب وزیر داخلہ شیخ رشید سوائے بھڑ بھڑیئے کے کچھ نہیں کرسکتے جھوٹ منافقت اور نفاق جسم میں بھرا پڑا ھے کوئی ھے جس سے کہہ سکیں کہ یہ ھے *مرد مومن مرد حق۔* ۔۔۔۔معزز قارئین!! آپ چند سال پیچھے چلے جائیں جنرل پرویز مشرف کا دور ھو یا جنرل ضیاء الحق کا دور حقیقت میں آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر للکارتے ھوئے شیر بہادر کی طرح اپنے غلیث مکار و عیار دشمن اسرائیل ھو یا امریکہ یا پھر بھارت کسی ایک کے آگے نہیں جھکے اور نہ ہی بکے۔۔۔ گزشتہ دنوں ‏اسرائیلی فوجی کا یہ گھٹنا مریم عساف کی گردن پر نہیں بلکہ پچپن مسلم ممالک کے حکمرانوں کی عزت و غیرت کے اوپر تھا۔ اگر کوئی ذندہ ضمیر ہو تو ضرور محسوس کررہا ہوگا اس گھنٹے کا دباؤ اپنے ضمیر کے اوپر۔ اس کا زمین پر گرا ہو اسکارف شاید کعبے کے غلاف سے زیادہ معتبر ہو لیکن ایسا سمجھنے کیلئے کسی محمد بن قاسم یا صلاح الدین ایوبی جیسے کا ایمان و جذبہ جہاد درکار ہے جو اس دور کے حکمرانوں, رہنماؤں سیاستدانوں میں ناپید ہے۔ ایسا کسی مسلمان نے کسی مغربی ملک میں کسی غیر مسلم لڑکی کے ساتھ کیا ہوتا تو دنیا میں ایک کہرام مچ جاتا اور اس کی مذمت میں بیانات کی لائنیں لگ جاتی لیکن یہ ایک مظلوم فلسطینی لڑکی ہے ایک محکوم قوم کی فرد ہے۔ ایک ایسا فلسطین جس سے کسی کو ملک کا کوئی تجارتی فائدہ منسلک نہیں جہاں سے زکواۃ’ صدقات و فطرہ اور دیگر فنڈز کے ملنے کا کوئی امکان نہیں۔ لہذا اس کے حق میں کون آواز بلند کرے گا یا اس پرظلم کی مذمت کرنے کی کس کو حاجت ہوگی۔ لیکن سلام ھے ترکی اور ایران اور جہادی تنظیموں کو جنھوں نے فی الفور جوابی حملے سے بتادیا کہ غیرت ایمانی ابھی چند ایک مسلم ممالک میں ھے۔ انھوں نے بتادیا کہ یہ حسینی ہیں اور حسینی سر تو کٹا سکتے ہیں کفر کے آگے جھک نہیں سکتے۔ عیدین اور جمع کے موقع پر تمام پاکستانی مظلوم شہید فلسطینیوں کے حق میں شدید بھرپور انداز میں اپنا احتجاج ریکارڈ کرائیں اور اسی احتجاج میں کشمیر کے مظلوموں کو بھی شامل کریں۔ عالم دنیا کو بتادیں کی دنیا کے دو بڑے دہشتگرد ملک ہیں جن میں ایک اسرائیل ھے دوسرا بھارت۔ عالم دنیا ان دونوں ممالک کا احتساب کرے اور ان پر شدید پابندیاں عائد کرے یقیناً یہ مطالبات ہر مظلوم قوم اور مغلوب عوام کے ہیں پھر دیکھتے ہیں کس حد تک انسانی حقوق کی تنظیمیں متحرک ھوتی ہیں اور عورت آزادی مارچ میں اچھلنے والیاں اب کیوں خاموش ہیں کہاں گئیں ان کی فحاشہ زبانیں کہاں مرگئیں یاد رکھیں اب اسطرح کے اسرائیلی اور امریکی ایجنڈوں پر کام کرنے والی این جی اوز پر سختی سے پابندی عائد کردی جائے جو سادھ ذہن کی بچیوں کی سوچ کی بگاڑ کا باعث بن رہی ہیں, ہمیں جہاد سے عشق ھے’ ہمیں ایمان سے لگاؤ ھے’ ہمیں عزت و وقار عزیز ھے’ ہمیں الله اور رسول پر جان نچھاور عزیز ھے’ پاک افواج زندہ باد پاکستان پائندہ باد۔۔۔۔۔۔!!

کالمکار: جاوید صدیقی

MKB Creation

Mehr Asif

Chief Editor Contact : +92 300 5441090

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

MKB Creation
Back to top button

I am Watching You