کرائمز

راولپنڈی : سینئر سول جج (کرمنل ڈویژن)راولپنڈی غلام اکبر نے اینٹی کرپشن

راولپنڈی : سینئر سول جج (کرمنل ڈویژن)راولپنڈی غلام اکبر نے اینٹی کرپشن کے مقدمہ میں انکوائری کے لئے پیش نہ ہونے پر وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا ء اللہ کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے ہیں

رانا ثنا ء اللہ کے وارنٹ کلر کہار چکوال میں 3نجی ہاؤسنگ سوسائٹیوں کی تعمیرمیں مروجہ قوانین کی خلاف ورزی،ان کی زد میں آنے والے پہاڑوں کی کٹائی اور ماحول کو آلودہ کرنے سمیت دیگر الزامات کے تحت درج مقدمہ میں انکوائری کے لئے پیش نہ ہونے کی بنا پر جاری کئے گئے اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ نے 3اکتوبر2019کو تعزیرات پاکستان کی دفعات 420،468،467،471اور109کے علاوہ اینٹی کرپشن ایکٹ کی دفعہ 5/2/47کے تحت مقدمہ نمبر 20درج کیا تھااس مقدمہ میں رانا ثنا ء اللہ کی گرفتاری کے لئے لاہور سے آنے والی ٹیم میں شامل انسپکٹر ویجلنس نے عدالت کے روبرو تحریری استدعا کی کہ اینٹی کرپشن کی خصوصی ٹیم مذکورہ مقدمہ کی تفتیش کر رہی ہے جبکہ رانا ثنا ء اللہ اس مقدمہ میں نامزد ملزم ہیں جس کی تلاش کی گئی لیکن وہ کہیں دستیاب نہیں ہوئے لہٰذا اس مقدمہ میں ملزم کے بلا ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کئے جائیں تاکہ رانا ثنا ء اللہ کی دستیابی کو ممکن بنایا جا سکے عدالت نے درخواست منظور کرتے ہوئے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے عدالت نے جاری کردہ وارنٹ میں قرار دیا کہ تفتیشی افسر کے پاس موجود ریکارڈ کی تصدیق کے بعد انصاف کے تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے وارنٹ جاری کئے گئے ہیں اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ نے رضوان نامی شخص کی مدعیت میں 3اکتوبر2019کو تعزیرات پاکستان کی دفعات 420، 468، 467، 471 اور109کے علاوہ اینٹی کرپشن ایکٹ کی دفعہ 5/2/47کے تحت مقدمہ نمبر 20درج کیا تھاتحفظ ماحولیات ایجنسی (انوائرمنٹل پروٹیکشن ایجنسی)کے سابق و موجودہ ڈی جی کے علاوہ محکمہ ماحولیات چکوال، ضلع کونسل چکوال کے افسران اور کلر کہارکے سابق سب رجسٹرار، رجسٹری محرراور سوسائٹی مالکان سمیت 11سے زائدافراد کے خلاف درج مقدمہ کے متن کے مطابق کلر کہار کے نزدیک شالیمار ہلز فارم، فالکن ٹاؤن فارم ہاؤس اور بسم اللہ فارم ہاؤس کے نام پر زیر تعمیر ہاؤسنگ سوسائٹیوں کے مالکان نے محکمہ ماحولیات سے این او سی اور ضلع کونسل چکوال سے نقشہ منظور کروائے بغیرخوبصورت پہاڑوں کی کٹائی کر کے کام شروع کر دیاجس سے ماحول بہت آلودہ ہو رہا ہے جبکہ سوسائٹیوں کے مالکان نے محکمہ ماحولیات اور ضلع کونسل چکوال کے افسران سے ملی بھگت کر کے غیر قانونی طور پر کام شروع کر رکھا ہے اور سرکاری خزانے میں نقشہ کی مد میں فیس بھی جمع نہیں کروائی گئی 2رکنی انکوائری ٹیم نے تمام ریکارڈ طلب کر کے تحقیقات کی جس میں یہ بات سامنے آئی کہ سابق ڈی جی ای پی اے لاہور نے شالیمار ہل فارم کو قواعدو ضوابط کی خلاف کرتے ہوئے این او سی جاری کیا جس سے علاقے کے قدرتی ماحول کو نقصان پہنچایا اسی طرح ڈی جی ای پی اے عرفان نذیر نے شالیمار ہل فارم کو قواعدو ضوابط کے برعکس جاری این او سی پر نہ تو سوسائٹی کے خلاف کوئی کاروائی کی اور نہ ہی این او سی منسوخ کیا،محکمہ ماحولیات چکوال کے سٹیٹ ڈائریکٹر فواد علی نے بطور فیلڈ افسر کبھی بھی شالیمار ہل فارم کے بے ضابطگیوں اور این او سی کی منسوخی سے متعلق اپنے متعلقہ اعلیٰ حکام کو آگاہ نہ کیا،ضلع کونسل چکوال کے ڈی او پلاننگ طارق عزیز،ایم او پی شہباز احمد اورانفورسمنٹ انسپکٹرشیر علی نے شالیمار ہلز فارم، فالکن ٹاؤن فارم ہاؤس اور بسم اللہ فارم ہاؤس کے ایل او پی نامنظور ہونے کے باوجود موقع پر ہونے والی تعمیرات اور سوسائٹیوں کی تشہیری مہم رکوانے کے لئے کوئی کاروائی نہ کی اسی طرح سابق سب رجسٹرار کلر کہار مقبول حسین نے بسم اللہ فارم ہاؤس کی رجسٹریاں منظور کیں،رجسٹری محرر کلر کہار نے سال2017میں بسم اللہ فارم ہاؤس کی ہونے والی رجسٹریوں کے متعلقہ کاغذات کی جانچ پڑتال نہ کی اور انہیں سب رجسٹرار سے منظور کروایا جبکہ اس وقت متعلقہ سوسائٹی کو این او سی بھی جاری نہ ہوا تھا،بسم اللہ فارم ہاؤس کے مالک اخلاق احمد،شالیمار ہلز فارم کے مالک نثار احمدفالکن ٹاؤن کلر کہار کے مالک سید ابراہیم جان نے پنجاب پرائیویٹ ہاؤسنگ سکیم لینڈ سب ڈویژن رولز2010کی دانستہ خلاف ورزی کی اور سوسائٹیوں کی تشہیر کرتے رہے یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ پنجاب نے سیف سٹی اتھارٹی لاہور سے متعلق ایک انکوائری میں آئی جی پولیس اسلام آباد کوپہلے ہی11اکتوبر کو طلب کر رکھا ہے اس ضمن میں ڈائریکٹوریٹ جنرل آف اینٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ پنجاب کی ہدائیت پرڈپٹی ڈائریکٹر ویجیلنس کی جانب سے 6اکتوبرکوضابطہ فوجداری کی دفعہ160کے تحت جاری طلبی کے نوٹس میں آئی جی اسلام آباد اکبر ناصر خان کو ہدائیت کی گئی ہے کہ وہ سیف سٹی اتھارٹی لاہور سے متعلق انکوائری نمبر65/22میں 11اکتوبر کو ڈائریکٹر ویجلینس اینٹی کرپشن پنجاب کے دفتر واقع فرید ہاؤس میں حاضر ہوں۔

رپورٹ : افتخار خٹک سے راولپنڈی

MKB Creation

Mehr Asif

Chief Editor Contact : +92 300 5441090

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

MKB Creation
Back to top button

I am Watching You