اہم خبریںگجرات

تھانہ ککرالی کے نواحی گاﺅں کلیاں میں ڈیڑھ درجن سے زائد ڈنڈوں سوٹوں سے مسلح بااثر

تھانہ ککرالی کے نواحی گاﺅں کلیاں میں ڈیڑھ درجن سے زائد ڈنڈوں سوٹوں سے مسلح بااثر افرادکاغریب خاندان پر دھاوا،ڈنڈوں سوٹوں سے پورے خاندان کے مرد،خواتین ، بچوں اور بوڑھوں پر بہیمانہ تشدد،بااثرملزمان نے نالی کے پانی کے تنازعہ پر غریب خاندان کے درجن بھر مرد و خواتین اور بچوں کو مار مار کر ادھ موا کر دیا ،

تھانہ ککرالی پولیس کی روایتی بے حسی،چار دن گزرنے کے باوجود پولیس کارروائی کرنے سے گریزاں،میڈیکل رپورٹس بھی رکوا دی،اور الٹا مضروبان کے خلاف تھانہ میں جھوٹی درخواست بھی دے دی،بااثرملزمان کی غریب خاندان کو جان سے مار دینے کی دھمکیاں،علاقہ میں خوف و ہراس کی فضاقائم ،معصوم بچے خوف سے نفسیاتی مریض بن گئے۔تفصیلات کے مطابق تھانہ ککرالی کے نواحی گاﺅں کلیاں (پلاہ گراں)کے رہائشی غریب خاندان کے افراد محمدعشرت،عابد فاروق پسران فضل کریم،سمیرابی بی زوجہ محمد انور،سعدیہ زوجہ محمد عشرت،نازنین زوجہ عابد فاروق،اقرا بی بی زوجہ ساجد فاروق،سمعیہ بی بی زوجہ ظفر اقبال سمیت بزرگ فضل کریم اوربچوں کو وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا،خواتین کے کپڑے پھاڑ دیئے اور بالوں سے پکڑ کر گلی میں گھسیٹتے رہے ۔بعد ازاں بااثر ملزمان غریب خاندان کو بد ترین تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد للکرے مارتے ہوئے فرار ہو گئے ۔بااثر ملزمان میںشوکت علی ولد محمد شفیع،عاصم ولد محمد شفیع،لیاقت ولد محمد شفیع،عمر ولد محمد یوسف،افران ولد محمد یوسف،ذیشان ولد محمد یوسف،جبران ولد محمد شریف،عثمان ولد محمد شریف ،ہمراہ 8کس نامعلوم افرادکے خلاف پولیس تھانہ ککرالی کو تحریری درخواست اور میڈیکل رپورٹ دینے کے باوجود پولیس کارروائی کرنے سے تاحال گریزاں ہے ۔غریب خاندان نے میڈیا کی وساطت سے وزیر اعظم پاکستان،وزیر اعلیٰ پنجاب،آئی جی پنجاب،ڈی آئی جی گجرانوالہ،ڈی پی او گجرات ،ڈی ایس پی کھاریاں سے انصاف کی اپیل کی ہے ۔مضروب خاندان کا کہنا ہے کہ ہمیں بااثر خاندان کی جانب سے جان و مال کا شدید خطرہ ہے۔ ملزمان ریکارڈ یافتہ ہیں اس سے قبل بھی متعدد افراد کو تشددکا نشانہ بنانے کے مقدمات میں ملوث رہ چکے ہیں ۔

رپورٹ:فیصل گجر گجرات

MKB Creation

Mehr Asif

Chief Editor Contact : +92 300 5441090

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

MKB Creation
Back to top button

I am Watching You